[]
Home » Sports & Health » یوگا کی لیڈر شپ ٹریننگ کی ورکشاپ میں ہریانہ کے سہیل پہلے سپر اسٹار لیڈرمنتخب
یوگا کی لیڈر شپ ٹریننگ کی ورکشاپ میں ہریانہ کے سہیل پہلے سپر اسٹار لیڈرمنتخب

یوگا کی لیڈر شپ ٹریننگ کی ورکشاپ میں ہریانہ کے سہیل پہلے سپر اسٹار لیڈرمنتخب

یوگا میڈیکل ورزشوں کی لیڈر شپ ٹریننگ کی ورکشاپ میں ہریانہ کے سہیل پہلے سپر اسٹار لیڈرمنتخب


نئ دہلی، یوگا میڈیکل ورزشوں میں سپر اسٹار یوگا لیڈر بننے اور بنانے کے مقصد سے بین الاقوامی یوگا گرو ڈاکٹر بدرالاسلام کیرانوی کی رہنمائ میں نئ دہلی کے ابوالفضل انکلیو میں واقع انسٹی ٹیوٹ آف ڈربک یوگا اینڈ کلینک آف آیوش پیرا میڈکس کے تعاون سے ایک یوگا میڈیکل ورزشوں کی لیڈر شپ ٹریننگ کی ورکشاپ اس ورکشاپ میں ہریانہ کے سہیل، سب کی پسند سے پہلے سپر اسٹار لیڈرمنتخب ہوئے۔

آپ مانیں یا نہ مانیں لیکن یہ حقیقت ہے کہ ہندوستانی موروثی علاج کی تکنیک سے ماخوذ ڈاکٹر بدرالاسلام کیرانوی کی منتخبہ یوگا میڈیکل ورزشیں آج دنیا جہاں کا اتخاب اور پسند بن چکی ہیں یہاں تک کہ ڈاکٹر اسلام نے اپنے مخصوص سٹائل سے اب سے ٤٥ سال قبل سن ١٩٨٥ میں یوروپ اٹلی جا کر وہاں کے دو ہزار سے زائد ایلوپیتھی ڈاکٹروں کو میڈیکل کانفرنس میں یہ یوگا میڈیکل ورزشیں سکھا کر انہیں اپنی گفتگو اور ورزشوں کی نمائش سے قائل کیا تھا-

 

YOGA IS MY PASSION & NOW ISLAMIC SCHOLARS’ VIEW IN MY SUPPORT: Dr Badrul Islam Kairanvi

آپ کو یہ جان کر خوشی ہوگی کہ حکمائے ہند کو یوگا میڈیکل ورزشوں کی اس ورکشاپ سے بڑی توقعات ہیں، حکیم عطاءالرحمن اجملی نے کہا کہ اگر نوجوان ڈاکٹر اسلام کی یہ جادوئی ورزشیں سیکھ لیں تو یقینا ہسپتالوں پر مریضوں کا بوجھ گھٹ جائے گا۔

سید اعجاز حسین ایڈیٹر ماہنامہ طبی ڈایجسٹ الشفا دہلی نے کہا کہ ڈاکٹر اسلام کی بے شمار نفع بخش اور امن و امان کے ساتھ دوستانہ ماحول بنانے والی ریفائنڈ اور ہائی ٹیک طبی ورزشوں سمجھنا اور کرنا بڑا آسان ہے۔ حکیم محمد مرتضی دہلوی نے کہا کہ میں گزشتہ دو سال سے ڈاکٹر بدرالاسلام کیرانوی کے ٹچ میں ہوں اور ان سے سیکھی ہوئی انتہائی مفید ورزشوں سے نفع اٹھا رہا ہوں، یہ واقعی کمال کی طبی ورزشی ہیں۔ عمران قنوجی صاحب نے کہا کہ ان طبی ورزشوں سے میں اپنے آبائی وطن کے لوگوں کو جلد فائدہ دلانے کے لیے وہاں کیمپ لگواؤں گا۔

حکیم آفتاب نے کہا کہ ہماری کوشش ہوگی کہ ہم ہر گھر میں ڈاکٹر اسلام کی طبی ورزشوں کے جانکار بچے تیار کریں تاکہ وہ اپنے گھر والوں کو بہت سے امراض سے بچا لیا کریں۔
21ویں صدی کے رہن سہن اور کشیدہ حالات نے ان ورزشوں کی اہمیت میں کئی گنا اضافہ کر دیا ہے۔ نوجوانان ہند ان ورزشوں کے قاعد بن کر، درد مند دل کے ساتھ، خدمت خلق میں سربلندی کی یہ آسان راہ اپنا سکتے ہیں، اس میدان میں روزگار حاصل کر سکتے ہیں اور ان ورزشوں کے اپنے ہیلتھ سینٹر چلا کر لوگوں کو راحت اور ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کر سکتے ہیں۔

Please follow and like us:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

12 + 5 =

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>

Scroll To Top
error

Enjoy our portal? Please spread the word :)